عید کی آمد ہے ، خود خوبصورتی سے مہندی لگائیں ، ویڈیو دیکھیں

مہندی لگانا اور ڈیزائن بنانا محض ایک شوق نہیں بلکہ ایک پرکشش پروفیشن کی حیثیت اختیار کر چکا ہے اور سینکڑوں خواتین کے روزگار کا وسیلہ کہلاتا ہے۔ اِن دنوں مہندی میں بہت سے ڈیزائن آ چکے ہیں ان میں زیادہ تر اسٹائلش ڈیزائن مقبول ہیں۔ مہندی کے ڈیزائن میں نمایاں تبدیلی آئی ہے اور اب مہندی سے ڈیزائن کچھ اس طرح کا بنایا جاتا ہے کہ ہتھیلی کا زیادہ تر حصہ خالی رہے اور ہتھیلی کا سادہ حصہ مہندی کے سرخ کمبی نیشن کے ساتھ زیادہ خوبصورت معلوم ہو۔

مہندی کس طرح لگائی جائے ؟

٭ـ مہندی لگانے سے پہلے ہاتھوں کو اچھی طرح صابن سے دھو کر صاف اور خشک کر لینا چاہیے۔

٭ـ ہمیشہ معیاری کمپنی کی کون استعمال کریں۔

٭۔ بہت زیادہ عرصے رکھی ہوئی کون کبھی استعمال نہ کریں

٭۔ سنگھار وغیرہ کی مقبول برانڈز کو استعمال کریں

٭۔ کسی نئی آزمائش میں پڑ کر اپنا فنکشن خراب کرنے کی بجائے پہلے سے آزمودہ کون مہندی کو استعمال کریں۔

٭ـ مہندی لگانے کے بعد اس کے اوپر سے کوئی چیز مت لگائیں

٭۔ اکثر خواتین سوکھنے پر لیموں یا چینی کا پانی اوپر سے لگاتی ہیں یا وِکس کا لیپ کر دیتی ہیں۔ مگر اس سے مہندی پھیلتی ہے اور اسے لگانے کا کوئی فائدہ بھی نہیں ہوتا لہٰذا مہندی کے اوپر سے کوئی چیز نہ لگائیں۔

٭ـ مہندی سوکھ جانے پرہی دھو کر خشک کر لیں۔

٭ـ بہتر نتائج کے لیے مہندی ہمیشہ تقریب سے دو روز پہلے لگائیں کیونکہ مہندی کا رنگ دو دن کے بعد نکھر کر سامنے آتا ہے –

بچیاں اور خواتین ہاتھوں، پیروں اور بازووں کے علاوہ گردن اور کمر پر بھی مہندی کے ڈیزائن لگواتی ہیں۔ عربی مہندی قدرے موٹی اور زیادہ جگہ گھیرتی ہے جبکہ حیدر آبادی کراچی کے مہندی کے ڈیزائن پتلے، باریک اور بیل اسٹائل سے لے کر پورے ہاتھ، بازو اور پیروں پر ایک ہی طرح کی نقش و نگار بنائے جاتے ہیں۔ اٹالین میں چوکور اور گول زایوں سے نقش و نگار بنائے جاتے ہیں۔ یمنی مہندی قدرے عربی اسٹائل سے ملتی جلتی ہے۔

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں