چار مختلف زبانوں میں پڑھی جاسکنے والی حیرت انگیز کتاب

آزر کیوان، پارسیو کا ایک بڑا پیشوا گزرا ہے۔ اس نے ایک عجیب و غریب کتاب تصنیف کی تھی۔
جس میں یہ کمال تھا کہ اصل نسخے کی زبان خالص فارسی تھی لیکن نقطون کے ردو بدل سے عربی بن جاتی تھی اور اگر الفاظ کو الٹ کر پڑھتے تو ترکی اور مصحف کرنے سے ہندی بن جاتی تھی ایک اور مصنف نے لکھا کہ بعص لوگ اس کتاب کو محسن فانی کشمیری کی تصنیف اور بعض داراشکوہ کی تصنیف بتاتے ہیں۔
لیکن یہ ذوالفقاراردستانی کی تصنیف ہے۔

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں