چین تمباکو نوشوں کی سب سے بڑی مارکیٹ

تمباکو نوشی سے متعلق بیماریوں چین میں اس صدی میں 200 ملین افراد کی موت کا سبب بن گئیں اور کروڑوں لوگوں کو غربت کی طرف دھکیل دیا ہے – جمعہ کے روز شائع ہونے والی ڈبلیو ایچ او کی رپورٹ کے مطابق چین اس وقت دنیا میں تمباکو کی پیدا کرنے اور صارفین کی سب سے بڑی مارکیٹ ہے ، یہ صنعت حکومت چین کو بھاری ٹیکس کا ذریعہ ہے – سنہ 2015 میں اس صنعت کا منافہ 160 بلین ڈالر تھا جو ہر سال 20 فیصد اضافے سے بڑھ رہا ہے –

رپورٹ میں The Bill China Cannot Afford کے حوالے سے لکھا گیا ہے کہ سنہ 2014 میں 350 بلین یو آن کا استعمال ہونے والا تمباکو سنہ 2000 سے دس گناہ زیادہ تھا –
چین میں ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے نمائندے برنارڈ سکوارتلنڈر کے مطابق اس وقت چین میں 28 فیصد نوجوان اور 50 فیصد مرد ریگولر تمباکو نوشی کرتے ہیں ، رپورٹ میں چینی حکومت کو تمباکو نوشی کم کرنے کے لیے مشورہ دیا گیا ہے کہ تمباکو کی مصنوعات پر 50 فیصد تک ٹیکس لگائے تاکہ 20 ملین نوعمر تمباکو نوشوں کو موت سے بچایا جا سکے –

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں