بہاول پور کرکٹ ایسوسی ایشن میں اختلافات، چھ کلبز پر پابندی عائد

بہاول پور(فیض رسول ہاشمی سے)بہاول پور کرکٹ‌ایسوسی ایشن میں‌ اختلافات شدت اختیار کرگئے.پرویژنل کمیٹی نے چھ مقامی کلبز پر پابندی عائد کر دی.تفصیلات کے مطابق کچھ عرصہ پہلے بہاول پور کرکٹ ایسوسی ایشن نے بذریعہ خط پی سی بی کو آگاہ کیا کہ عرصہ دراز سے چھ کرکٹ کلبز کے کھلاڑی ڈسپلن کی خلاف ورزیوں‌میں ملوث پائے گئے ہیں جنہیں‌اسسٹنٹ‌کوچ سجاد پرویز عباسی کی پشت پناہی حاصل ہے.قانونی طور پر کرکٹ گراؤنڈ کی خوبصورتی اور معیار کو برقرار رکھنے کے لیے کسی ار کھیل کی اجازت نہیں دی جاتی لیکن یہ لوگ کسی حکم کو خاطر میں لائے بغیر کرکٹ گراؤنڈ میں فٹ بال کھیلتے کر اسے خراب کرتے رہے. بہاول پور کرکٹ ایسوسی ایشن نے خط میں‌یہ موقف اختیار کیا کہ جب انہیں‌منع کیا گیا تو ان کھلاڑیوں‌نے گارڈ پر تشدد کیا اور افسران کو سنگین نتائج کی دھمکیاں‌دی.

پرویژنل کمیٹی نے اس درخواست پر ایکشن لیتے ہوئے آج بہاول پور کے چھ کلبز کی نیٹ پریکٹس اور دیگر میچز کھیلنے پر غیر معینہ مدت کے لیے پابندی عائد کر دی.اس کے ساتھ ہی انٹر کلبز ڈسٹرکٹ کرکٹ چیمپئن شپ 2018 کو بھی ملتوی کر دیا گیا جسے عوامی حلقوں‌نے مقامی کرکٹ کے لیے دھچکا قرار دیتے ہوئے کھلاڑیوں‌کے رویے کی شدید مذمت کی ہے.

پابندی عائد کیے جانے والے کلبز کے نام یہ ہیں
جناح سپورٹس کلب
اسٹیگز کلب
ریلائنس کلب
العباس کلب
واریئر کلب
سٹار کلب

یاد رہے کہ 6 فروری کو کشمیر کپ کے فائنل کے دوران جناح کلب اور فالکن کلب کے درمیان بھی میچ کے اختتام پر جشن منانے کے غیر اخلاقی انداز کی وجہ سے بدمزگی ہوئی تھی جس پر مہمان خصوصی سابق قومی کرکٹر مشتاق احمد نے کھلاڑیوں کو ڈسپلن پر لیکچر دیا تھا.

bahawalpur-cricket

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں